Question & Answer

  • گو نگے کا طلاق کیلئے ڈھیلے پھینکنا

    الاستفتاء

    کیا فرماتے ہیں علماء کرام اس مسئلہ کے بارے میں

    ایک شخص جو کہ گونگا ہے۔اس نے اپنی والدہ کے کہنے پر اپنی بیوی کی طرف تین ڈھیلے طلاق کے پھینکے۔ کیا اس سے طلاق واقع ہو گی۔

    بسم اللہ الرحمن الرحیم

    الجواب بعون الملک الوھاب

    اگر گونگا لکھنا جانتا ہے تو محض اشارے سے طلاق واقع نہیں ہو گی اور اگر لکھنا نہ جانتا ہو طلاق اشارے سے واقع ہو جاتی ہے بشرطیکہ اشارہ مخصوصہ کیساتھ اس کے منہ سے آواز بھی خارج ہو جیساکہ گونگوں کی عادت ہے کہ جب وہ اشارے کی زبان میں بات کریں تو ضرور ان کے منہ سے ایک آواز نکلتی ہے۔اب صورت مسؤلہ میں اگر یہ شخص پڑھا لکھا نہیں ہے تو ڈھیلے ڈالنے سے طلاق واقع ہو جائے گی کہ سندھ میں ڈھیلے ڈالنا طلاق کیلئے معروف اشارہ ہے۔اگر تین ڈھیلے ڈالے تو تین طلاق سے عورت حرام مغلظ ہو کر نکاح سے باہر ہو جائے گی بشرطیکہ آوازیں خارج ہوئی ہوں۔ ورنہ طلا ق واقع نہیں ہو گی۔

    در مختار میں ہے

    (او اخرس)۔۔۔۔۔واستحسن الکمال اشتراط کتابتہ (باشارتہ)المعھودۃ فانھا تکون کعبارۃ الناطق استحسانا۔

    شامی میں باشارتہ المعھودۃ کے تحت ہے

    ای المقرونۃ بتصویت منہ لان العادۃمنہ ذالک فکانت الاشارۃ بیانا لما اجملہ الاخرس

    584ج2 ص

     واللہ تعالی اعلم بالصواب

    مفتی محمد ابراہیم القادری الرضوی غفرلہ

    مفتی جامعہ غوثیہ رضویہ سکھر 17 صفر1419 ھ

    مطابق 13.6.98

     

Ask a Question

Tanzeem Publications

  • رب پہ بھروسہ از مولانا فاروق احمد سومرو
  • شب وروز کی پکار از مولانا کریم داد قادری
  • برائیوں کی جڑ از مولانا احمد رضا
  • ظلم کی برائی از مولانا مشتاق احمد شمس القادری
  • اخلاص از مولان گلشیر احمد قادری
  • رضا بالقضاء از مولانا دانیال رضا
  • نیکی کی بہاریں از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری
  • مہمان نوازی از علامہ عبد المصطفی شیخ زادہ
  • جمالِ شریعت سندھی ترجمہ بہارِ شریعت پہلا حصہ از مفتی جمیل احمد چنہ
  • شکرِ پروردگار از تنظیم الارشاد زیرِ طبع
  • فضائل رمضان از علامہ محمد صادق سومرو
  • عمامہ کے ماثور رنگ از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری
  • الاصباح شرح صغری اوسط کبری از مفتی محمد شہزاد حافظ آبادی
  • ستائیس رجب کی عبادتیں ، عبادت یاگمراہی؟ از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری