Question & Answer

  • رضاعت

    الاستفتاء 

    زینب اور عاتکہ دو عورتیں ہیں۔زینب کے بیٹے نے عاتکہ کا دودھ پیا اور عاتکہ کی بیٹی نے زینب کا دودھ پیا۔کیا ان بچوں کا آپس میں یا ان کے بھائی بہنوں کیساتھ نکاح ہو سکتا ہے؟

    السائل

    محمد یوسف کھوکھر

    محلہ تاج پورہ حافظ آباد

    الجواب بعون الملک الوھاب

    صورت مسؤلہ میں نہ تو زینب کابیٹا عاتکہ کی بیٹی سے نکاح کر سکتاہے نہ عاتکہ کی دوسری بیٹیوں سے نکاح کر سکتاہے اسی طرح عاتکہ کی بیٹی پر زینب کا وہ بیٹا جس نے اس کے ساتھ دودھ پیاہے حرام ہے اور زینب کے دوسرے بیٹے بھی حرام ہیں ان میں کسی طرح نکاح درست نہیں۔

    اللہ تعالی قرآن مجید میں ارشاد فرماتا ہے

    واخواتکم من الرضاعۃ

    (النساء:٢٣)

    یعنی تم پر تمہاری رضاعی بہنیں حرام ہیں

    واللہ تعالی اعلم بالصواب

    محمد شہزاد خان

    جامعہ ربانیہ غوثیہ

    اصحابی ٹاؤن ماڈل کالونی ملیر کراچی ٢٥ دسمبر ٢٠١٥

Ask a Question

Tanzeem Publications

  • رب پہ بھروسہ از مولانا فاروق احمد سومرو
  • شب وروز کی پکار از مولانا کریم داد قادری
  • برائیوں کی جڑ از مولانا احمد رضا
  • ظلم کی برائی از مولانا مشتاق احمد شمس القادری
  • اخلاص از مولان گلشیر احمد قادری
  • رضا بالقضاء از مولانا دانیال رضا
  • نیکی کی بہاریں از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری
  • مہمان نوازی از علامہ عبد المصطفی شیخ زادہ
  • جمالِ شریعت سندھی ترجمہ بہارِ شریعت پہلا حصہ از مفتی جمیل احمد چنہ
  • شکرِ پروردگار از تنظیم الارشاد زیرِ طبع
  • فضائل رمضان از علامہ محمد صادق سومرو
  • عمامہ کے ماثور رنگ از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری
  • الاصباح شرح صغری اوسط کبری از مفتی محمد شہزاد حافظ آبادی
  • ستائیس رجب کی عبادتیں ، عبادت یاگمراہی؟ از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری