Question & Answer

  • شوہر کے وصال کے بعد عدت

    الاستفتاء

     جناب مفتی صاحب

    السلام علیکم

    گزارش یہ ہے کہ میرے لڑکی کے شوہر کا انتقال ہوگیا تو اس کے دیوروں نے تین دن گزرنے کے بعدکہا کہ تم اپنے والدین کے پاس چلی جاؤ جس پر میری لڑکی نے کہا اگر آپ اصرار کر رہے ہیں تو میں چالیسواں گزرنے کے بعد جاؤں گی۔ چالیسویں کے بعد ہماری لڑکی ہمارے گھر پر آگئی ہے۔ اس کے دو بچے بھی ہیں ایک لڑکی اور ایک لڑکا اب اُس کے شوہر کو مرے ہوئے تقریباً چھ ماہ گزر چکے ہیں ہماری لڑکی نے عدت پوری نہیں کی اب اس کا حل کیا ہوگا۔ کیا ہماری لڑکی چھ ماہ گزرنے کے باوجود بھی عدت کی مدت پوری کر سکتی ہے یا نہیں اگر کر سکتی ہے تو کہاں ہمارے گھر یا اپنے شوہر والے گھر آپ سے مؤدبانہ عرض ہے کہ ہمیں اس کا کوئی اچھا سا حل بتائیں تا کہ ہم اسلامی تقاضوں کو پورا کریں۔ شکریہ

    الجواب بعون الملک الوھاب

    صورتِ مسؤلہ میں آپ کی بیٹی کی عدت مکمل ہو چکی ہے مجھے سائل کے فرستادہ نے بتایا کہ لڑکی حاملہ نہیں اور غیر حاملہ کی عدت چار ماہ دس دن ہوتی ہے لہٰذا عدت گزر گئی ہے اگر اس کا کوئی مناسب رشتہ آجائے تو دوسری جگہ نکاح ہوسکتا ہے۔

    واللہ تعالیٰ اعلم بالصواب

    مفتی محمد ابراہیم القادری الرضوی غفرلہ

    مفتی جامعہ غوثیہ رضویہ سکھر

Ask a Question

Tanzeem Publications

  • رب پہ بھروسہ از مولانا فاروق احمد سومرو
  • شب وروز کی پکار از مولانا کریم داد قادری
  • برائیوں کی جڑ از مولانا احمد رضا
  • ظلم کی برائی از مولانا مشتاق احمد شمس القادری
  • اخلاص از مولان گلشیر احمد قادری
  • رضا بالقضاء از مولانا دانیال رضا
  • نیکی کی بہاریں از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری
  • مہمان نوازی از علامہ عبد المصطفی شیخ زادہ
  • جمالِ شریعت سندھی ترجمہ بہارِ شریعت پہلا حصہ از مفتی جمیل احمد چنہ
  • شکرِ پروردگار از تنظیم الارشاد زیرِ طبع
  • فضائل رمضان از علامہ محمد صادق سومرو
  • عمامہ کے ماثور رنگ از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری
  • الاصباح شرح صغری اوسط کبری از مفتی محمد شہزاد حافظ آبادی
  • ستائیس رجب کی عبادتیں ، عبادت یاگمراہی؟ از ابو اریب محمد چمن زمان نجم القادری